26 مهر 1398
  -  
2019 اُكتبر 18
  -  
19 صفر 1440
 
خبریں نمبر: 316 تاریخ: 2017/05/23 مناظر:  

اردو ادب کی پاسداری زبان و قلم کے اعتبار کی ضامن ھ

اردو ادب کی پاسداری زبان و قلم کے اعتبار کی ضامن ھے ردو ادب کی پاسداری زبان و قلم کے اعتبار کی ضامن ھے علما و طلاب قم سے نجم الواعظین مولاناابن علی واعظ صاحب کا خطاب

اردو ادب کی پاسداری زبان و قلم کے اعتبار کی ضامن ھے

علما و طلاب قم سے نجم الواعظین مولاناابن علی واعظ صاحب کا خطاب

۲۵ شعبان قم المقدسہ
انڈین اسلامک اسٹوڈنٹس یونین  اور حلقہ راہیان ادب کی جانب سے مدرسہ عالی امام خمینی(رہ) کے شہید صدر (رہ) ہال میں ایک علمی اور ادبی نشست کا اہتمام کیا گیا جس میں ہندوستان سے تشریف لائے مہمانان خصوصی استاذ الاساتذہ نجم الواعظین مولانا ابن علی واعظ صاحب قبلہ( مدیر حوزہ علمیہ آیت اللہ غفرانمآب لکہنؤ)
اور حجت الاسلام مولانا سید سلمان عابدی صاحب قبلہ(علی پور) نے شرکت فرما کر حاضرین جلسہ کو اپنے بیانات و تجربات سے مستفید فرمایا
جواد رضوی کی دلنشین آواز میں تلاوت کلام ربانی سے جلسہ کا آغاز ھوا اور اسکے فورا بعد منظوم دور میں مولانا ذیشان صاحب نے اشعار پیش کئے
تقریری دور میں مولانا سلمان عابدی نے اپنی علمی اور ادبی کاوش نہج البلاغہ اور دیگر ادبی اور مذھبی کتابوں کے منظوم تراجم پر روشنی ڈالتے ھوئےطریقہ ترجمہ اور اسکے مشکل مراحل کو طے کرنے کے حوالے سے آسان راہوں کی طرف نشان دہی کی اور اپنے معركة الآرا  نندہ کلام بھی پیش کئے
جبکہ مولانا ابن علی واعظ صاحب نے تدریس و تبلیغ کے تجربات بیان کرتے ہوئے علما و مدرسین کی اھم ترین ذمہ داریوں پر تفصیلی گفتگو کی
مولانا نے اردو ادب کی افادیت اور اھمیت کے پیش نظر خطبا اور صاحبان قلم  خصوصا مترجمین سے اردو زبان کی باریکیوں پر غور و خوض کرنے کی تاکید کی اور کہا کہ کسی زبان سے کسی زبان میں ترجمے کا حق انکو حاصل ھے جو دونوں زبان کی نزاکتوں اور باریکیوں سے پوری طرح واقف ھوں مولانا نے بزرگ علما و محقیقین کی تحریروں اور ترجموں سے استفادہ کی تاکید کرتے ھوئے شعر و ادب میں علما کی حصہ داری اور اسکے مثبت نتائج کا ذکر کیا۔۔۔
اس موقع پر ھند و پاک کے علما و مبلغین نے کثیر تعداد میں شرکت فرما کر آخر جلسہ میں تحریری سوالات کئے اور دونوں بزرگوراوں نے اپنے قانع کنندہ جوابات سےحاضرین کو مستفید فرمایا
آخر جلسہ میں ناظم جلسہ جناب جوھر عباس صاحب نے نمائندہ و صدر انجمن طلاب مولانا سید فیضان حیدر  جوادی( نوہ علامہ جوادی) کو دعوت سخن دی موصوف نے حاضرین خصوصا مہمانان خصوصی کا انجمن کی جانب سے شکریہ ادا کرتے ھوئے ادارہ مجمع محقیقین کے تعاؤن کا بھی شکریہ ادا کیا اور اسلام و مسلمین جہان کے حق میں دعائیں کی

ماخذ: